ٹرکوں، ویگنوں، رکشوں پر لکھی عبارات

ویکی اقتباس سے
Jump to navigation Jump to search
ٹرک پہ لکھا ایک جملہ
ٹرک پہ لکھا ایک جملہ

پاکستان، بھارت، افغانستان میں ٹرکوں، ویگنوں، رکشوں پر لکھے، جملے، اشعار، مصرعے، اصلاحی و مذہبی اقوال، مذہبی نعرے اور دیگر عبارات ایک کافی پرانی روایت ہے، یہ شاید ان ایجادات کے ساتھ ہی وجود میں آ گئی تھی۔ ان میں کچھ ایسے بھی جملے ہیں جو اب ہمارے ادب اور ہماری زبان کا حصہ بن چکے ہیں ، ان میں سے اکثر کے تو اصل "موجد" کا بھی اتا پتا نہیں۔ اس کام کی اہمیت کا اندازہ اس بات سے لگایا جا سکتا ہے کہ اس پر پاکستان و بیرون پاکستان تحقیقی کام کیا جا چکا ہے۔

دعائیں[ترمیم]

اچھی دعائیں[ترمیم]

  • ماں کی دعا جنت کی ہوا۔

بددعائیں (مزاحیہ)[ترمیم]

  • باپ کی بد دعا، جا پتر رکشہ چلا۔
  • جلنے والے کا منہ کالا۔
  • جس نے ماں کو ستایا اس نے رکشہ چلایا۔

قوانین[ترمیم]

  • ہارن دو، راستہ لو۔
  • پاس کر یا برداشت کر۔

اشعار[ترمیم]

ٹرک پہ لکھا شعر

سنجیدہ[ترمیم]

ایک رکشہ پہ لکھا مزاحیہ جملہ

طنزیہ و مزاحیہ[ترمیم]

مصرعے[ترمیم]

سنجیدہ[ترمیم]

طنزیہ و مزاحیہ[ترمیم]

  • پپو یار تنگ نہ کر

مذہبی نعرے[ترمیم]

سنی[ترمیم]

شیعہ[ترمیم]

تبلیغی[ترمیم]

  • مجھے دعوت اسلامی سے پیار ہے۔
  • دعوت و تبلیغ زندہ باد۔
  • دیکھتے رہو مدنی چینل۔

اقوال[ترمیم]

مذہبی اقوال[ترمیم]

مزاحیہ اقوال[ترمیم]

  • دیکھ ضرور مگر پیار سے۔
  • جلو مت ورنہ کالے ہو چاو گے۔

سماجی ومعاشرتی اقوال[ترمیم]

  • ماں، باپ کی عزت کرو۔

تعریفی جملے[ترمیم]

  • پہاڑوں کا شہزادہ۔
  • سواری لبے نہ لبے، سپیڈ ایک سو نبے۔ 190

وطن سے محبت کا اظہار[ترمیم]

تصاویر[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]